بلاگنگ کے فائدے اور نقصانات (Blogging Advantages and Disadvantages In Urdu)

السلام علیکم محترم دوستوں

جیسے کہ آپ جانتے ہیں بلاگنگ اب مکمل طور پر چینج ہوچکا ہیں لوگ اب بلاگنگ کو پیشہ اور نوکری کی طرح دیکھ رہے ہیں. اس بات میں کوئی شق نہیں ہے کہ آج بلاگنگ بلاگنگ آن لائن پیسے کمانے کا سب سے اچھا طریقہ بن چُکا ہیں لیکن بلاگنگ کے فوائد اور نقصانات بھی ہیں. تو یہاں پر ہم بلاگنگ کے فائدے اور نقصانات کے بارے میں جانیں گے.


بلاگنگ کے فائدے اور نقصانات (Blogging Advantages and Disadvantages In Urdu)


آپ ایک بلاگر ہو سکتے ہیں. اپنا بلاگ شروع کرسکتے ہیں، کسی بلاگنگ کمیونٹی سے جوڑ سکتے ہیں یا پھر آپ کسی بلاگر کی ٹیم کا ممبر بن سکتے ہیں. آپ کوئی بھی طریقہ منتخب کریں بلاگنگ سے پیسہ کمانے میں ٹائم لگتا ہیں.

بلاگنگ سے آپ پیسہ کما سکتے ہیں، نام کما سکتے ہیں، مشہور ہو سکتے ہیں لیکن اس کے کچھ نقصانات بھی ہیں. کچھ ایسے نقصانات جن کا آپ کی زندگی پر بُرا اثر ہوتا ہے. آج اس پوسٹ میں ہم آپ کو بلاگنگ کے دس سے زائد فائدے اور نقصانات (advantages And  disadvantages) بتا رہا ہوں جنہیں پڑھ کر سب کچھ کلیر ہو جائے گا.

{tocify} $title={Table of Contents}

بلاگنگ کے فائدے اور نقصانات (Blogging Advantages and Disadvantages)

بلاگنگ کرنے اور ایک بلاگر ہونے کے بہت سے فائدے ہیں اور نقصانات بھی، لیکن ہم زیادہ تر بلاگنگ فوائد پر ہی توجہ مرکوز کرتے ہیں اور اس کے نقصانات کو نظرانداز کر دیتے ہیں. اگر آپ حال ہی میں بلاگنگ شروع کرنے والے ہو اور اپنی نوکری چھوڑنے والے ہیں تو آپ بلکل غلط ہیں.


میرا مشورہ ہے کہ آپ جب تک بلاگنگ سے اپنی نوکری سے زیادہ پیسے نہ کمائیں تب تک آپ اپنا پُرانا کام جاری رکھیں جب اپنے کام سے زیادہ پیسے بلاگنگ سے کمانے لگ جائیں تب آپ اپنے پرانے کام کو چھوڑ دیں. 

اور اگر آپ کو نوکری وغیرہ چھوڑنا ہی ہے تو آپ کے پاس 5-6 مہینوں کے لیے پیسوں کا بیک اپ ہونا چاہئے مطلب آپ کے پاس اتنے پیسے ہونے چاہئیں کہ پانچ چھ مہینے چل سکے. 


بلاگنگ کرنے کے فائدے ( Blogging Advantages in urdu)

مجھے بلاگنگ میں دو سال ہو گئے ہیں اور میں نے شروع کرنے کے دو ہی مہینے میں کامیابی حاصل کرلی تھی اس وجہ سے مجھے بلاگنگ کا کافی تجربہ ہو گیا ہے اور میں آپ کو اس کے اہم فوائد یا نقصانات بتا سکتا ہوں. "اور اسی لیے میں نے یہ ایک اردو بلاگ بنایا تاکہ آپ کے ساتھ اپنا تجربہ اردو میں شئر کر سکوں میرے باقی بلاگ انگلش میں ہیں" چلیں جانتے ہیں بلاگنگ کرنے کے کیا فوائد ہیں.


نمبر ایک. اپنا کام خود کے مالک

کسی بھی نوکری میں آپ کو اپنے مالک کی ماننی پڑے گی اور فکس ٹائم 8 سے 12 گھنٹے کام کرنا پڑے گا. بلاگنگ میں ایسا کچھ بھی نہیں ہے. آپ اگر ایک بلاگر ہیں تو آپ خود کے مالک ہیں اور کوئی آپ کو آرڈر دینے والا نہیں ہے. آپ جب چاہے تب تک کام کریں اور جب چاہے تب فارغ رہ سکتے ہیں.

آپ خود مالک ہیں اور کچھ بھی کرنے کے لیے آزاد ہیں. آپ اپنے بزنس پلان بنائیں اور جب چاہے تب اُس پر کام کرنا شروع کر سکتے ہیں. آپ پر کسی طرح کا کوئی پابندی نہیں ہیں.


نمبر دو. مقبول شخصیت بننا

اگر آپ چاہتے ہیں کہ دنیا میں آپ کو جاننے والے لاکھوں لوگ ہو تو آپ بلاگنگ کا انتخاب کرسکتے ہیں. بلاگنگ سے آپ نئے نئے لوگوں سے جوڑ سکتے ہو اور اُن کے لیے اچھا بلاگ لکھ کر اُن کے دِلوں میں جگہ بنا سکتے ہو. انٹرنیٹ پر مقبول ہونے کا یہ ایک اچھا طریقہ ہو سکتا ہیں.

جیسے جیسے آپ کا بلاگ ترقی کرے گا اور آپ آگے بڑھیں گے آپ کی مقبولیت اُتنی ہی بڑھے گی. لوگ آپ کے بارے میں جانیں گے اور آپ کے بارے میں لکھیں گے، لوگوں کو آپ کے بارے میں بتائیں گے. 


نمبر تین. کمائی (earning)

بلاگنگ پہلے اپنی بات کہانیاں وغیرہ دوسروں کے ساتھ شئر کرنے کے حد تک محدود تھا لیکن آج آپ اسے کیریئر بنا سکتے ہو اس سے پیسے کما سکتے ہو. آپ بلاگنگ کو بزنس کی طرح دیکھ اور کر سکتے ہو. میں کسی اور کی نہیں پاکستان کی بات کرتا ہوں، پاکستان میں آج بہت سے بلاگر لاکھوں اور ہوسکتا ہے کروڑوں کما رہے ہیں.

میں دو سالوں سے بلاگنگ کر رہا ہوں اور اتنی ارننگ کر لیتا ہوں کہ مجھے کسی طرح کی نوکری یا کوئی اور کام کرنے کی ضرورت نہیں پڑتا ہیں. کوئی بھی شخص بلاگنگ سے اچھی کمائی کر سکتا ہے. 


نمبر چار. آمدنی میں اضافہ

بلاگنگ سے آپ بہت زیادہ تو نہیں لیکن بہت پیسہ کما سکتے ہو. نوکری کی تنخواہ کی طرح اس کی آمدنی فکس نہیں ہوتی بلاگنگ کی آمدنی آپ کے کام پر انحصار کرتی ہیں. آپ جتنی زیادہ محنت کروگے اُتنا ہی زیادہ کما سکتے ہو. سب سے اچھی بات اس کی کوئی حد نہیں ہے کہ آپ اتنے سے زیادہ نہیں کما سکتے.

بلاگنگ سے آپ لاکھوں، کروڑوں کما سکتے ہو. یہ بات پاکستان کے ٹاپ بلاگر ثابت کر چکے ہیں. نوکری میں آپ کتنی بھی محنت کرلو آپ کو فکس تنخواہ ہی ملے گی باقی بلاگنگ میں آپ جتنا بہتر اور زیادہ کام کرو گے آپ کی آمدن میں اُتنی ہی اضافہ ہوگی. 


نمبر پانچ. کام پر توجہ مرکوز

جب ہم کوئی نوکری کرتے ہیں تو آفس میں روزانہ باس کے تانے سننے پڑتے ہیں. وہ ہم سے ایک دن میں کئی دنوں کا کام جو کرانا چاہتا ہیں. صرف اتنا ہی نہیں جب ہم شام کو نوکری سے فری ہوتے ہیں تو بھی ہمارے دماغ میں باس کی باتیں آتی رہتی ہیں. ایسے میں آپ کو کیا کرنا ہے سوچنے کا ٹائم تک نہیں ملتا. 

بلاگنگ میں آپ کو کوئی کچھ بھی کہنے والا نہیں ہے اور آپ اپنے ذہن سے اپنے حساب سے کام کر سکتے ہیں. ایسے میں آپ اپنے کام پر زیادہ اور اچھے سے توجہ مرکوز کر سکتے ہیں. 

جب آپ اپنے دلچسپی سے کام کرو گے تو تھکاوٹ بلکل محسوس نہیں ہوگی. 


نمبر چھ. تعلیمی اہلیت کی کوئی پابندی نہیں

کوئی بھی نوکری کرنے کے لیے آپ کو ضروری کوالیفیکیشن کی ضرورت ہوتی ہے لیکن بلاگنگ میں آپ کو کسی بھی طرح کی کوالیفیکیشن کی  نہیں پڑتی ہے. آپ بینا کسی سرٹیفکیٹ کے بلاگنگ شروع کر سکتے ہو.

صرف اتنا ہی نہیں آپ کو بلاگنگ شروع کرنے کے لیے کسی طرح کی فیس یا کوئی چارجز دینے کی ضرورت نہیں ہے. یہ بلکل فری ہیں اور آپ جب چاہیں اپنا بلاگ شروع کرسکتے ہو. 

 فری بلاگ کیسے بنائیں بلاگنگ مکمّل کورس یہاں دیکھیں

نمبر سات. آپ ماہر ہوں گے

جب آپ بلاگنگ شروع کرتے ہیں تو آپ کا ماہر ہونا ضروری نہیں ہے بلاگنگ آپ کو ایک ٹائم کے بعد کے بعد ماہر بنا دے گا. ایک سادہ اور کم علم والا بندہ بھی بلاگنگ شروع کر سکتا ہیں. 

آپ کو بلاگنگ کرنے سے پہلے سب کچھ آنا چاہئے ضروری نہیں ہیں. آپ بلاگنگ کرتے کرتے سب کچھ سیکھ سکتے ہو. جیسے جیسے آپ بلاگنگ کرو گے نیا، نیا اور نیا سکتے جاوگے. آنے والے ٹائم میں آپ اپنے آپ کو ماہر پاؤ گے.

یہ تو تھے بلاگنگ کے فائدے، اب چلو دیکھتے ہیں بلاگنگ کے نقصانات،

بلاگنگ کرنے کے نقصانات (Blogging Disadvantages)

بلاگنگ کرنے کے نقصانات (Blogging Disadvantages)


بلاگنگ کرنے کے بہت سارے فائدے ہیں لیکن کچھ نقصانات بھی ہیں. کچھ ایسے نقصانات جو ہر بلاگر کے ساتھ ہوتے ہیں. جن میں سے کچھ نقصان اس قسم کے ہیں.


ایک. اندھا پن - نظر کی کمزوری

بلاگنگ کرنے کے سب سے بڑا نقصان ہے کہ آپ اگلے کچھ سالوں میں نظر کی کمزوری محسوس کروگے یا پھر ہو سکتا ہے آپ کو آنکھوں کی پرابلم بہت زیادہ ہو جائے یہ پرابلم ہر بلاگر کے ساتھ ہوتا ہیں.

آپ نے دیکھا ہوگا زیادہ تر بلاگر آنکھوں پر چشمے کا استعمال کرتے ہیں. بلاگنگ سے ہونے والی یہ ایک ایسا مسئلہ ہے جسے ہم آمدنی اور دلچسپی کی وجہ سے نظرانداز کر دیتے ہیں لیکن اگلے پانچ - دس سال بعد آپ کو یہ سب سمجھ آجائے گا.

دو. اکیلا پن محسوس کرنا

بلاگ ایک بہت بڑا کمیونٹی ہو سکتا ہے اور اس میں بہت سے لوگ ایک ساتھ کام کر سکتے ہیں لیکن بلاگ کے مالک کو ایک ٹائم میں اکیلا پن محسوس ہوتا ہی ہیں. جب وہ اکیلا بلاگ پر کام کر رہا ہوتا ہے تو اُسے اپنے اچھے پارٹنر اور اُن لوگوں کو یاد کرتے ہیں جو اُن کے لیے مسائل پیدا کرتے ہیں.

بھلے ہی آپ کے بلاگ پر ایک بڑی ٹیم کام کرتی ہو لیکن بلاگنگ میں سیٹ ہونے کے لیے آپ کو اکیلے کام کرنا پڑتا ہے. کچھ کام ایسے ہوتے جنہیں دوسروں کے ساتھ یا سامنے نہیں کیا جا سکتا. سٹڈی کرنے اور بلاگنگ کے مستقبل کے بارے میں سوچنے کے لیے آپ کا اکیلا ہونا ضروری ہیں.


تین. معاشی حالات

جب ایک بلاگر بلاگنگ کی شروعات کرتا ہے اور اگلے کچھ مہینوں تک آمدنی نہیں کر پاتا تو اُسے معاشی مسائل ہوتے ہیں کیوں کہ اُس کے پاس آمدنی کا کوئی اچھا ذریعہ نہیں ہوتا ہے. حالانکہ وہ اس میں والدین کی مدد لیتے ہیں لیکن ٹائم زیادہ ہونے پر وہ غیر آرام دہ محسوس کرتے ہیں.

وہ بلاگنگ سے پیار کرتے ہیں اور بلاگنگ کرنا چاہتے ہیں مگر بےبسی کی وجہ سے انہیں بلاگنگ کے ساتھ اضافی نوکری کرنی پڑتی ہیں. یہ بہت ہی ضروری حالت ہوتی ہے اور ہر بلاگر کے لیے ایک بڑا امتحان ہیں.


چار. تعلقات کمزور بن جاتے ہیں

کسی بھی نوکری میں 8-10 یا پھر 12 گھنٹے کام کرنا پڑتا ہیں. لیکن ایک بلاگر کے بلاگ پر دن رات کام کرنا پڑتا ہیں. بلاگنگ میں 4 یا پانچ گھنٹے کام کرکے بڑا بلاگر نہیں بنا جا سکتا اس کے لیے آپ کو دن رات محنت کرنی ہوگی.

بلاگر اپنے کام میں اتنا ٹائم دے دیتا ہے کہ اُس کے اپنے دوستوں، رشتہ داروں، اور گھر والوں کے خیال ہی نہیں رہتا اور وہ اُن کو کم ٹائم دینے لگتا ہے. ایسے میں لوگوں کی اُس میں دلچو کم  ہو جاتی ہیں. اور اُس سے ملنا جلنا کم کر دیتے ہیں. جب کبھی انہیں اُس کی ضرورت ہوتی ہے تو انہیں پہلے سے پتہ ہوتا ہے کہ اُس کے پاس ٹائم نہیں ہوگا ☹️


پانچ. نظم و ضبط

آپ نے پڑھا اور سنا ہوگا کہ ہر کام میں کامیاب ہونے کے لیے نظم و ضبط ضروری ہوتا ہیں. بلاگنگ میں ایسا نہیں ہے آپ ٹائم ٹیبل بنا کر بلاگنگ نہیں کرتا سکتے اس میں آپ کو کبھی بھی کام کرنا پڑ سکتا ہے. مثال کے طور، آپ کی سائٹ ڈاؤن ہو گئی اور رات کا ٹائم ہے تو آپ کو رات میں ہی اُس مسلے کو ٹھیک کرنا ہوگا ورنہ آپ کو بلاگ ڈاؤن ہونے کا نقصان اٹھانا پڑے گا. 

حالانکہ بلاگنگ کو بھی نظم و ضبط کی ضرورت ہے لیکن آپ کو دن رات کبھی بھی کام کرنا پڑھ سکتا ہے جس سے آپ کی زندگی میں خلل پیدا ہوتا ہے. بلاگنگ میں ہر پل کا خبر لینے اور کامیاب ہونے کے لیے آپ کو نظم و ضبط توڑ کر کبھی دن میں اور کبھی رات میں کام کرنا پڑتا ہیں. 

چھ. رویہ اور سیکھنا

بلاگنگ میں سماجی ہونے کے لیے آپ کا لوگوں کے سوالوں کا جواب دینا ضروری ہے اور اس کے لیے آپ کو ٹائم چاہیئے. اگر آپ کے پاس اس کے لیے ٹائم نہیں ہے تو سامعین اسے آپ کا غلط رویہ مان کر آپ کو ملزم بنا دیتے ہیں. انہیں بس اُن کے سوال کا جواب چاہیے آپ کے پاس ٹائم ہو یا نہ ہو.

سیکھنا ایس ای او، اچھا مواد، نیا مواد، تازہ ترین اپڈیٹ اور اپ ٹو ڈیٹ ان سب کے لیے آپ کے پاس ٹائم ہونا چاہئے لیکن ایک کامیاب بلاگر بننے کے بعد آپ کے پاس ٹائم بہت کم ہوتا ہیں. اگر آپ ایسا نہیں کرتے ہو تو دوسرے بلاگر جو آپ کے مدمقابل ہوں گے اُن سے بہت پیچھے رہ جاؤگے.

سات. جب آپ بُرا محسوس کرتے ہیں تو آپ کام نہیں کرسکتے

بلاگنگ ایسا کام ہیں، جب آپ اچھا محسوس نہیں کررہے ہوتے ہیں تو آپ پوسٹ آرٹیکل وغیرہ نہیں لکھ سکتے. اس کے لیے آپ کو فارغ اور صحت مند ہونا ضروری ہیں. جب کبھی آپ مصروف ہوتے ہیں یا پھر آپ بیمار ہو جاتے ہیں تو آپ بلاگ مینج نہیں کر سکتے. ایسے میں آپ کو آمدنی اور ٹریفک دونوں کا نقصان ہوگا.

یہ بھی دیکھیں

آخر میں، بلاگنگ کے جتنے فائدے ہے اتنے نقصان بھی ہے. جہاں آپ بہت پیسہ کما لیتے ہو وہاں آپ کو صحت کے مسائل ہوتے ہیں اور جہاں آپ مشہور شخصیت بن جاتے ہو وہی آپ کے اپنوں سے رشتے کمزور ہو جاتے ہیں. ایک بلاگر بلاگ کے علاوہ اپنے دوسرے کاموں کو ٹائم نہیں دے سکتا.

اگر آپ کو یہ معلومات اچھی لگی ہیں تو اسے شئر کرنا نہ بھولیں گا شکریہ 🙂


Techpk

Hello Visitors, I Owner Of This Site My Name Is Abdul Kareem And I Belong To Pishin District Of Balochistan Province of Pakistan facebook twitter blogger pinterest

Post a Comment

Previous Post Next Post